خبرنامہ

ملکی ترقی کے معاملے پر سیاست نہیں ،سب کو ایک ہونا چاہئے:وزیراعظم

اسلام آباد(ملت آن لائن )قومی اقتصادی کونسل نے آئندہ مالی سال 18-2017 کے لیے پاکستان کی تاریخ کے سب سے بڑے ترقیاتی بجٹ کی منظوری دے دی جبکہ اقتصادی ترقی کے ہدف کو آئندہ مالی سال کے لیے 6 فیصد تک مقرر کردیا۔تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم نوازشریف کی زیر صدارت قومی اقتصادی کونسل کا اہم اجلاس ’’وزیر اعظم ہاؤس ‘‘ میں ہوا جس میں چاروں وزرائے اعلیٰ ، وزیر اعظم آزاد کشمیر اور وفاقی و صوبائی وزرا نے شرکت کی۔ قومی اقتصادی کونسل نے آئندہ مالی سال کے لیے 2ہزار ایک سو 13 ارب کے ترقیاتی بجٹ کی منظوری دیتے ہوئے آئندہ مالی سال کے لیے معاشی ترقی کا ہدف 6 فیصد مقرر کیا گیا ہے۔اجلاس میں وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے آئندہ بجٹ کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔وفاقی ترقیاتی بجٹ 1 ہزار 1 ارب روپے جبکہ صوبائی ترقیاتی بجٹ 1 ہزار 1 سو 12 ارب روپے رکھا گیا ہے۔ رواں مالی سال مجموعی ترقیاتی بجٹ کا حجم 16 سو 75 ارب روپے تھا۔وفاقی بجٹ کے لیے 1 سو 68 ارب روپے غیر ملکی ذرائع سے حاصل کرنے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔وزیر اعظم نے آئندہ مالی سال کے لیے معاشی ترقی کی شرح کا ہدف 6 فیصد مقرر کیا جبکہ رواں مالی سال ملکی معاشی شرح نمو 5.3 رہی۔